بس تُم میرے پاس رہو

image

جیسے سمندر میں گِہرائ ہو

جیسے موج کسمسائ ہو

جیسے دُور کوئ طُوفان ہو

اور دھنک کا آسمان ہو

بس تُم میرے پاس رہو

بس تُم میرے پاس رہو

 

جیسے چاندنی کی ٹھنڈک ہو

جیسے بادلوں پہ دستک ہو

جیسے پھُولوں کی رنگت ہو

اور سِتاروں جیسا جہاں ہو

بس تُم میرے پاس رہو

بس تُم میرے پاس رہو

 

3 thoughts on “بس تُم میرے پاس رہو

  1. کیا کہنے ہیں! آپ کی اجازت سے چند اضافی اشعار

    جیسے کو‍‍‏ئل گنگناتی ہو
    گیت کوئ سناتی ہو
    جیسے پھول چمن میں کھلتے ہوں
    دو دل بچھڑ کر ملتے ہوں
    جیسے نغمگی فضا میں ہو
    مخمور مہک ہوا میں ہو
    بس تُم میرے پاس رہو
    بس تُم میرے پاس رہو

    Like

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s