شِدّتِ بیقراری

image

بے اِختیاری کی اُڑان میں مُسکراتے بے قید پَل آزاد ہیں

کیسے سمبھالیں گے بےلگام وقت میں چُھپے حِصار کو

بے بس لمحوں کی آڑ میں بے خوف رنگین اِرادے اَٹل ہیں

کیسے تھامیں گے بے خُودی میں بسے تلا تُمِ جذبات کو

بے حِساب و اِنتہا میں ٹُوٹتے بے پرواہ جسم و جان ہیں

کیسے روکیں گے بے کَل آوارہ شُعلوں کے سُلگتے ساز کو

بے مثال عشق کے مِحور سے آراستہ ہے بے پناہ گُل رُخ

کیسے سمیٹیں گے بے چین کروٹوں کے شبنمی جالوں کو

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s