صدائیں

image

کِسی راستے بھی چل نِکلوُں

تیری آنکھیں پِیچھا کرتی ہیں

گہری جھیل کےعکس تلےچُھپے

ڈوبتی کِرنیں پِیچھا کرتی ہیں

سبز دوپہر کی تازگی میں بسے

روشن راہیں پِیچھا کرتی ہیں

تیری یاد کی شعاعوں میں گُونجتی

ایسی صدائیں پِیچھا کرتی ہیں

 

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s