لِباسِ مجاز

image

لِباس نہیں تُمہیں اوڑھ

لیتے ہیں جانم کہ سِتارہ

آنچل کی رعنائی میں

پوشیدہ حُسن و شباب کے

بےخُود ساۓ کِسی اور

احساس کی رنگت پہچانتے

…..نہیں ہیں

سُرخ نیلم اورکبھی سونے

کی تاروں میں جڑے نَگ پھِسلتے

ہیں بدن کی سِلوٹوں کو چُومتے

تو اِس کی کشِش کسی اور

لمس کی گرمی پہچانتے

…..نہیں ہیں

اِس خیال میں اگر مخملی

دامن میں چُبھنے لگیں

کانٹے تو نرم شبنمی کلیاں

سرُور دینے لگتی ہیں اور

کھِلتے ہیں چمن جن کی

مِہک  کے سِوا یہ دھاگےکِسی

اور خوشبو کو پہچانتے

…..نہیں ہیں

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s