کٹھِن لمحات

image

اِن بانہوں سے آزاد ہوتی ہے جب آرزُو میری

جکڑ لیتے ہیں قید میں درد کے بھنور مُجھے

نظروں کی گھنی قُربت جُداہوجب پیمانوں سے

اُداس کردیتی ہیں اندھیروں کی ویِرانیاں مُجھے

دسترس میں نہیں ہوتےکبھی وصل کےموسم

اُڑا لے جاتے ہیں خزاں کے زرد پتّے مُجھے

دَم توڑنےلگوُں اُس کی بَزم سےالوداع لیتےہی

علیحدگی جگاتی ہےخواہش مَرجانےکی مُجھے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s