قطع راہ

image

جُدا ہے آغازِ قِصّہ اگر

انجامِ داستان کو بانٹ لیتے ہیں

کرن پڑتی ہے اندازِ رعنائی سے

آفتابِ آسمان کو بانٹ لیتے ہیں

بدن  ہِجرِ آشنائی میں جلے

روُحِ حیات کو بانٹ لیتے ہیں

کاروانِ بھید کی سواری میں

قافلۂِ رازداں کو بانٹ لیتے ہیں

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s