زیبِ آغوش

image

سِتاروں کو اُنس ہے چاند کی رعنائی سے کیونکہ

بغیر چمک کے محل جگمگایا نہیں کرتے

پڑتے ہی نظر نکھرنےلگتا ہے حُسن مذِید کیونکہ

بغیر کشِش کے دل ٹَکرایا نہیں کرتے

ادھُورے ہیں اُجالےشمس کی شِرکت کے بِناکیونکہ

بغیر چاہت کے عاشق بُلایا نہیں کرتے

پتنگےکو جلنے کی آس مار دیتی ہے کیونکہ

بغیر شِدّت کے بات منوایا نہیں کرتے

اسیِر ہے رُوح اُس بدن کی چار دیواری میں کیونکہ

بغیر لگن کے مُحبّت نِبھایا نہیں کرتے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s