کھَٹکا

image

اِن آنکھوں میں وہ افسانے نہ رِہ جائیں

ڈرتا ہے دل اِس خیال سے بار بار میرا

کہِیں شاخ سے ٹنگے زمانے نہ رِہ جائیں

ڈرتا ہے دل اِس خیال سے بار بار میرا

اِس راکھ میں جلتے آشیانے نہ رِہ جائیں

ڈرتا ہے دل اِس خیال سے بار بار میرا

موسمِ ہِجر کے لَب سُہانے نہ رِہ جائیں

ڈرتا ہے دل اِس خیال سے بار بار میرا

شمعٰ کی یاد میں تنہا پروانے نہ رِہ جائیں

ڈرتا ہے دل اِس خیال سے بار بار میرا

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s