غافل دل

IMG_1643

وہ کرے مُحبّت تو آگ بنتا ہے

دُھواں تو وہ کیوں انجان ہے

اُن چِنگاریوں سے جن کی راکھ

…میں جلتا ہے روز وجُود میرا

وہ چھُوۓ رُوح تو روشن ہونے

لگے رَگ و جاں تو وہ کیوں نہ

جانے ہے کہ اُس کسک کی چاہ

…میں مرتا ہے روز دل میرا

وہ چلے ہوا کی سِمت تو ویرانیوں

میں کھِلنے لگیں گُلاب تو وہ کیوں

نا آشنا ہے کہ اُس رُخ کی کشِش

…میں تڑپتا ہے روز بدن میرا

 

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s