افسانۂِ شَب

IMG_1640

رات ایک خیال کو چھُوا میں نے

اندھیر نگری میں نُور پایا میں نے

خوابیدہ کروٹوں کے تکیۓ تلے

سچ میں لِپٹا سراب دیکھا میں نے

نرم چاندنی کے وجُود میں بَستا

نِصف جوبن کا داغ پرکھا میں نے

گھنی پلکوں کی جھیل میں اُترتے ہی

نازنین جذبات کا عکس پہچانا میں نے

اُس اِنتظار کو بنا کر تاج ماتھے کا

تمام سلطنت کا خزانہ سمیٹا میں نے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s