بد نصیب شخص

E3D7BB32-95C2-4E4D-AE95-B49AAF622B17

وعدۂِ وفا کر کے مُکر گیا کوئی

خود ہی اپنے قَول سے پھِر گیا کوئی

آفریں ہے بدل لِیا چولا جس نے

اپنے ہی ہاتھوں ہُوا بے نقاب کوئی

خوشبؤِ حُسن چھُو نہ پاۓ جسے

شِہر مُحبّت کا ویراں چھوڑ گیا کوئی

اِنتہاۓ نا قدری کے اِس عالم میں بھی

دونوں جہاں کی شوخیوں سے گیا کوئی

مزار پہ آتا ہے اکثر پھُول چڑھانے وہ

دُعا میں جس کے نہ تھی شفا کوئی

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s