اِنتظارِ جاں

image

ہر یاد سنبھال کے رکھی ہے

ہر حرف کو چُوما ہے میں نے

اِنتظار کو لگا کر سیِنے سے

ہر درد کو پَرکھا ہے میں نے

نقش پہ سجدہ کرکے یُوں

ہر آیت کو پڑھا ہے میں نے

محفوط دل کی پناہ گاہ میں

ہر راز کو چھُپایا ہے میں نے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s